سان فرانسسکو: سماجی رابطے کیلئے استعمال ہونے والی مقبول ایپ واٹس ایپ پہلی دفعہ صارفین کے پیغامات کو جاسوسی کے خطرے سے بچانے کیلئے انتہائی طاقتور سیکیورٹی نظام متعارف کروارہی ہے۔

واٹس ایپ کی مالک کمپنی فیس بک نے اس سلسلے میں انفارمیشن سیکیورٹی کمپنی کے ساتھ مل کر پیغامات کو انکرپشن کے ذریعے محفوظ کرنے کے پراجیکٹ پر کام شروع کردیا ہے۔

خبر رساں ایجنسی اے ایف پی نے بھی اس خبر کی تصدیق کردی ہے کہ واٹس ایپ کے روزانہ اربوں کی تعداد میں انٹرنیٹ پر سفر کرنے والے پیغامات کو انکرپشن ٹیکنالوجی کے ذریعے جاسوسی سے محفوظ بنایا جارہا ہے۔